تجارتی کارکردگی میٹرکس

تجارتی کارکردگی میٹرکس

2022-06-10 • اپ ڈیڈ

ہر ٹریڈر بہترین نتائج حاصل کرنا چاہتا ہے۔ تاہم، صرف ایک ہوشیار ٹریڈر اپنے روزمرہ کے کاموں میں کارکردگی کے تجزیہ کی اہمیت کو سمجھتا ہے۔ تصور کریں، آپ بے ترتیبانہ طور پر ٹریڈ کھول سکتے ہیں اور ان میں سے کچھ میں منافع بھی حاصل کر سکتے ہیں، لیکن اچھے اعداد وشمار کے بغیر آپ ایک طرح سے لاس میں جائیں گے۔ اپنی تجارتی کارکردگی کا تجزیہ کرنا خاص طور پر اس وقت ضروری ہوتا ہے جب آپ کسی نئے تجارتی نظام کی جانچ یا ڈویلپنگ کر رہے ہوں۔ یہ مضمون ٹریڈنگ کی کارکردگی کے بنیادی میٹرکس کا احاطہ کرے گا جو آپ کے تجارتی اقدام کی جانچ پڑتال کرتے ہیں اور ایک بہترین تجارتی نقطہ نظر بنانے میں آپ کی مدد کرتے ہیں۔

تجارتی کارکردگی کیا ہے؟ 

جیسا کہ آپ نے تعارفی حصے سے اندازہ لگا لیا ہوگا کہ، اصطلاح ”تجارتی کارکردگی“ سے مراد ٹریڈنگ کے نتائج کا جائزہ لینے کا طریقہ کارہے۔ ایک ٹریڈر مناسب تشخیص حاصل کرنے اور معقول نتیجہ اخذ کرنے کے لیے مختلف میٹرکس یعنی اعداد وشمار کا استعمال کر سکتا ہے۔

اس طرح کے میٹرکس کی سب سے آسان مثال سرمائے پر واپسی (ROC) ہے۔ اس کا حساب اس طرح سے لگایا جاسکتا ہے کہ منافع کے مجموعے سے تقسیم شدہ سرمایہ۔ لہذا، مثال کے طور پر، اگر آپ $1000 ڈپازٹ کرتے ہیں اور ایک مخصوص مدت کے دوران $200 کا منافع کماتے ہیں، تو آپ کی واپسی %20 ہوگی۔

واپسی کے علاوہ، اور بھی اقدامات ہیں جو آپ اپنے تجارتی نتائج کا اندازہ لگانے کے لیے استعمال کر سکتے ہیں۔ اگلے پیراگراف میں، ہم سب سے زیادہ مقبول تکنیکوں پر تبادلہ خیال کریں گے.

تجارتی کارکردگی میٹرکس

مختلف طریقے ہیں جن سے آپ اپنی تجارتی کارکردگی کو ٹریک کرسکتے ہیں۔ مثال کے طور پر، کچھ ٹریڈرز مائیکروسافٹ ایکسل کا استعمال کرتے ہیں،جس میں ڈپازٹ کی فہرست، فی آرڈر لاٹ کا سائز، سپریڈ، ٹیک پرافٹ اور اسٹاپ لاس شامل ہو سکتے ہیں۔ اس ڈیٹا کی بنیاد پر، وہ خود کار طریقے سے کارکردگی کے تجزیہ کے لیے بنیادی میٹرکس کا حساب لگاتے ہیں، بشمول اوسط پرافٹ/لاس کے ہدف کی قیمت وغیرہ۔ اگر آپ میٹا ٹریڈر 4 یا 5 میں ٹریڈنگ کرتے ہیں، تو آپ اس سافٹ ویئر کے فراہم کردہ ٹولز استعمال کر سکتے ہیں ۔

میٹا ٹریڈر کی مدد کیساتھ کارکردگی کی رپورٹیں جنریٹ کرنا  

اگر آپ میٹا ٹریڈر میں اپنی تجارتی کارکردگی کو دیکھنا چاہتے ہیں تو اپنے ٹول باکس ونڈو میں ”ہسٹری“ بارکو کھولیں۔

1.png

سب سے پہلے، آپ چارٹ پر دائیں کلک کریں اور اس مدت کا انتخاب کریں جس کا آپ تجزیہ کرنا چاہتے ہیں۔

2.png

ہم نے ایک ماہ کا انتخاب کیا ہے۔ اس کے بعد، آپ ” رپورٹ“ پر کلک کریں اور اسے HTML یا XML کی صورت میں محفوظ کریں۔ اگر آپ اسے HTML کی صورت میں محفوظ کرتے ہیں، تو آپ اس فائل کو کھولنے کے لیے کوئی بھی براؤزر استعمال کر سکتے ہیں۔

3.png

میٹا ٹریڈر رپورٹ تیار کرے گا جو اس طرح نظر آئے گی:

4.png

چارٹ کے نیچے، میٹا ٹریڈر کچھ آسان تجارتی اعدادوشمار فراہم کرتا ہے۔

5.png

آئیے معلوم کریں کہ ان تمام میٹرکس کا کیا مطلب ہے!

سب سے پہلے، آئیے گراس اور نیٹ پرافٹ کے درمیان فرق کو سمجھیں۔ گراس منافع کسی بھی اخراجات یا قیمیت سے پہلے منافع کو ظاہر کرتا ہے، جبکہ نیٹ پرافٹ تمام اخراجات کے بعد ٹریڈر کا منافع ہوتا ہے۔ فاریکس میں، اخراجات سویپ چارجز اور بروکر کو ادا کیے جانے والے کمیشن ہو سکتے ہیں۔

منافع کا عنصر ظاہر کرتا ہے کہ آپ کتنی رقم لاس کرتے ہیں اس کے مقابلے میں آپ کتنی رقم کماتے ہیں۔ مثال کے طور پر، اوپر والے معاملے میں، ہمارے پاس پانچ ٹریڈزتھیں۔ ہم نے ان میں سے چار میں درج ذیل منافع کے ساتھ رقم کمائی: $0.13، $14.18، $59.6، اور $3.28۔ دوسری طرف، ہمیں ایک ٹریڈمیں $0.6 کا لاس ہوا۔ اگر ہم جیتنے والی پوزیشنوں کی کل قیمت کو مائنس سویپ لاس والی پوزیشنوں کی کل قیمت سے تقسیم کرتے ہیں تو ہمیں یہ نتائج ملتے ہیں:

((0.13+14.18+59.6+3.28)-4.16)/0.6=121.72

اس کا مطلب ہے کہ آپ کا منافع آپ کے لاس سے 121.7 گنا زیادہ تھا۔ یہ ایک انتہائی اچھے اعداد وشمارہیں۔ ذہن میں رکھیں کہ اگر آپ کسی حکمت عملی کی جانچ کرتے ہیں، تو یہ کافی سفارش کی جاتی ہے کہ منافع کا عنصر 1.75 اور 4 کے درمیان ہو۔ دوسری صورت میں، حکمت عملی ناقابل اعتماد ہے.

مطلق ڈرا ڈاؤن ابتدائی ڈپازٹ اور ٹریڈنگ اکاؤنٹ ڈپازٹ کی سطح سے نیچے تک پہنچنے والے کم ترین پوائنٹ کے درمیان فرق ہے۔ مثال کے طور پر، اگر آپ نے $1000 ڈپازٹ کئے ہیں، تو آپ کا اکاؤنٹ $2000 تک پہنچ گیا اور پھر گر کر $800 پر آگیا، مطلق ڈرا ڈاؤن $200 ($1000-$800=$200) ہوگا۔ یہ اعداد و شمار ابتدائی ڈپازٹ کے مقابلے میں آپ کے سب سے بڑے لاس کی نمائندگی کرتا ہے۔

زیادہ سے زیادہ ڈرا ڈاؤن آپ کے اکاؤنٹ تک پہنچنے والی زیادہ اور کم ترین ویلیوزکے درمیان فرق کو ظاہر کرتا ہے۔ مطلق ڈرا ڈاؤن تعریف کی وضاحت میں مثال کا استعمال کرتے ہوئے، زیادہ سے زیادہ ڈرا ڈاؤن $1200 ($2000-$800) ہوگا۔

ریلیٹو ڈرا ڈاؤن فیصد میں آپ کی ایکویٹی کی زیادہ سے زیادہ کمی کا ظاہر کرتا ہے۔ اس کا شمار زیادہ سے زیادہ ڈرا ڈاؤن کے طور پر کیا جا سکتا ہے جس کو زیادہ سے زیادہ ایکویٹی ویلیو سے 100 فیصد سے ضرب دیا جاتا ہے۔ ہمارے معاملے میں، ریلیٹوڈرا ڈاؤن % 60 کے برابر ہوگا۔

تینوں میٹرکس ایک ٹریڈرکے لیے بہت اہم ہیں، کیونکہ وہ آپ کے تجارتی اکاؤنٹ کے خطرے کے عنصر کی شناخت میں مدد کرتے ہیں۔ آپ کے ڈرا ڈاؤن کا معیار تجارتی اکاؤنٹ کے سائز پر منحصر ہے۔ اگر آپ کے اکاؤنٹ کا سائز بڑا ہے، تو 5-6% نارمل ہے، اور آپ کو اسے 6% سے کم رکھنا چاہیے۔ اگر آپ کے اکاؤنٹ کا سائز چھوٹا ہے، تو 15-20% ڈرا ڈاؤن نارمل ہے، اور 20% سے زیادہ ڈرا ڈاؤن کو خطرناک قرار دیا جا سکتا ہے۔

ڈرا ڈاؤن کے حساب کی بنیاد پر، ہم اپنے ریکوری فیکٹر یعنی بازیابی کے عنصر کی شناخت کر سکتے ہیں۔ ریکوری فیکٹر یعنی بازیابی کا عنصر نیٹ پرافٹ کی مطلق قدر کے برابر ہے جو زیادہ سے زیادہ ڈرا ڈاؤن سے تقسیم کیا جاتا ہے۔ مثال کے طور پر، اگر ہمارا نیٹ پرافٹ 72.43 ہے اور زیادہ سے ڈرا ڈاؤن 0.6 ہے، تو ہمارا ریکوری فیکٹر یہ ہوگا:

72.43/0.6=120.72.

ریکوری فیکٹر عام طور پر 1 سے بڑا ہونا چاہیے۔ ٹریڈروں کے مطابق، ریکوری کا عنصر جتنا زیادہ ہوگا، ٹریڈ اتنی ہی تیزی سے ڈرا ڈاؤن سے ریکوری ہو رہی ہوگی۔

رپورٹ کا ایک اور دلچسپ انڈیکیٹرشارپ ریشو ہے۔ نوبل انعام یافتہ ولیم ایف شارپ نے اسے تیار کیا ہے۔ یہ تناسب سرمایہ کاروں کو اس کے خطرے کے مقابلے میں سرمایہ کاری کی واپسی کو سمجھنے میں مدد کرتا ہے۔ تناسب جتنا زیادہ ہوتا ہے، ٹریڈر کی طرف سے لیے گئے خطرے کے حوالے سے منافع اتنا ہی زیادہ ہوتا ہے۔ عام طور پر، ٹریڈر1 کے برابر یا اس سے زیادہ شارپ ریشو رکھنے کو ترجیح دیتے ہیں۔ اگر تناسب 1 سے چھوٹا ہے تو، ایک ٹریڈرمتوقع واپسی کے مقابلے میں بہت زیادہ خطرہ مول لے رہا ہے۔ شارپ ریشو کا ایک کلاسک فارمولا اس طرح ہوتا ہے:

شارپ ریشو = (پورٹ فولیو کا ریٹرن ریٹ – رسک فری ریٹ ) / پورٹ فولیو کی اضافی واپسی کا معیاری ڈیوایشن یعنی انحراف۔

 میٹا ٹریڈر میں، شارپ ریشو کو سینڈر ڈیوایشن یعنی انحراف کے اوسط منافع کے طور پر شمار کیا جاتا ہے۔

ایک سورٹینوریشو بھی ہے، جو شارپ ریشو یعنی تناسب سے بہت ملتی جلتی ہے، لیکن کچھ ایڈجسٹمنٹ کے ساتھ۔ سورٹینو تناسب سرمایہ کاری کے کل اتار چڑھاؤ کو مدنظر نہیں رکھتا ہے۔ شارپ ریشو کے علاوہ، یہ کمی کے اتار چڑھاؤ پر توجہ مرکوز کرتا ہے۔ اس کی گنتی سرمایہ کاری کی اوسط واپسی اور خطرے سے پاک شرحوں کے درمیان فرق تلاش کرکے کی جاتی ہے۔ نتیجہ منفی واپسیوں کے معیاری انحراف سے تقسیم ہوتا ہے۔ ایک اعلی تناسب کو ترجیح دی جاتی ہے، کیونکہ یہ ظاہر کرتا ہے کہ ایک ٹریڈرکو منفی خطرے کی ہر اکائی کے لیے زیادہ منافع ملے گا۔

شارپ اور سورٹینو ریشو کا تیسرا بھائی ایک کالمرریشو ہے، جو ڈرا ڈاؤن کو خطرے کی پیمائش کرنے کے طور پر لیتا ہے۔

کارکردگی کے دیگر میٹرکس

میٹا ٹریڈر کی رپورٹ میں درج میٹرکس کے علاوہ، کچھ اور بھی ہیں جنہیں آپ اپنی کارکردگی کا تجزیہ کرنے کے لیے استعمال کر سکتے ہیں۔ آئیے ان کو تفصیل سے دیکھتے ہیں۔

2٪ طریقہ

یہ بالکل میٹرکس ہی نہیں ہے بلکہ رسک مینجمنٹ کا اصول ہے۔ اگر آپ اسے استعمال کرتے ہیں، تو آپ اس فیصد کا انتخاب کرتے ہیں جو آپ فی ٹریڈ خطرے میں ڈالنا چاہتے ہیں اور اس سے تجاوز نہیں کرتے۔ 2% اعداد و شمار وہ ہے جسے ٹریڈر عام طور پر منتخب کرتے ہیں۔ اس طرح، آپ اپنی ٹریڈ کو غیر متوقع ڈرا ڈاؤن سے روکتے ہیں۔

پوائنٹس/پپس کی پیمائش

اگر آپ یہ طریقہ منتخب کرتے ہیں، تو آپ ان پوائنٹس یا پِپس کی تعداد پر توجہ مرکوز کرتے ہیں جنہیں آپ فی ٹریڈ خطرے میں ڈالنا چاہتے ہیں۔ تاہم، ماہرین اس نقطہ نظر کو استعمال کرنے کی سفارش نہیں کرتے ہیں، کیونکہ وہ خطرے کے فیصد پر توجہ مرکوز کرنے کا مشورہ دیتے ہیں۔

رسک/ ریورڈ کا تناسب

فاریکس پر کلاسک کتابوں میں، عام طور پر 1:3 رسک/ریورڈ کا تناسب استعمال کرنے کی سفارش کی جاتی ہے۔ یعنی کسی خاص ٹریڈ پر انعام خطرے سے تین گنا زیادہ ہونا چاہیے۔

جیت/ہار کا تناسب

یہ اعدادوشمار دکھاتا ہے کہ ایک ٹریڈر کی ہارنے والی ٹریڈ کی تعداد کے مقابلےمیں کتنی جیتنے والی ٹریڈزہیں۔ مثال کے طور پر، اگر آپ کے پاس تمام 10 میں سے 6 کامیاب ٹریڈزہیں، تو آپ کی جیت کا تناسب 60% ہوگا۔ بعض اوقات، منافع بخش ٹریڈروں کی جیت کا تناسب 50% سے کم ہوتا ہے۔ ایسا اس لیے ہو سکتا ہے کیونکہ ان کی جیتنے والی ٹریڈ پر ان کا منافع اپنے ہارنے والے ٹریڈ پر ہونے والے نقصان سے زیادہ ہے۔

باٹم لائن

اس مضمون کو پڑھنے کے بعد، آپ میٹا ٹریڈر میں اپنی ٹریڈ کا تجزیہ تلاش کر سکتے ہیں اور وہاں درج میٹرکس کی تشریح کر سکتے ہیں۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ کارکردگی کے تجزیہ کے یہ عناصر دستی طور پر یا بیک ٹیسٹر کی مدد سے حکمت عملی کو جانچنے کے لیے بہترین ہیں۔ اگر آپ ٹریڈنگ روبوٹ کو پروگرام کرتے ہیں، تو ڈرا ڈاؤن اور منافع کے عوامل کا تجزیہ مزید بہتری کو سمجھنے کے لیے آپ کی کلید ثابت ہوگا۔

اسی طرح

ڈوجی کینڈل اسٹک پیٹرن کا استعمال کرتے ہوئے ٹریڈنگ کیسے کی جا سکتی ہے؟
ڈوجی کینڈل اسٹک پیٹرن کا استعمال کرتے ہوئے ٹریڈنگ کیسے کی جا سکتی ہے؟

ڈوجی کینڈلز نایاب پرندے ہیں، لیکن اگر آپ انہیں پکڑ لیتے ہیں، تو یہ صحیح داخلے کے لمحے سے فائدہ اٹھانے کا بہترین موقع ہو سکتا ہے۔ اس مضمون میں بحث کی جائے گی کہ ڈوجی کینڈل کیا ہے۔ آپ کو ایک ڈوجی حکمت عملی بھی ملے گی جو منافع دلا سکتی ہے۔

بلا جھجھک سوال پوچھیں

  • FBS اکاؤنٹ کو کیسے کھولا جائے؟

    ہماری ویب سائٹ پر ‘اکاؤنٹ کھولیں’ کے بٹن پر کلک کریں اور پرسنل ایریا میں جائیں۔ تجارت شروع کرنے سے پہلے، ایک پروفائل کی تصدیق کروائیں۔ اپنے ای میل اور فون نمبر کی بھی تصدیق کروائیں، اپنی شناختی تصدیق کروائیں۔ یہ طریقہ کار آپ کے فنڈز اور شناخت کی حفاظت کی ضمانت دیتا ہے۔ ایک بار جب آپ تمام جانچ پڑتال کرلیں تو، ترجیحی ٹریڈنگ پلیٹ فارم پر جائیں اور ٹریڈنگ شروع کریں۔

  • FBS کی جانب سے کمائی گئی رقم کیسے وڈرا کر سکتے ہیں؟

    طریقہ کار بہت سیدھا ہے۔ ویب سائٹ پر وڈرا کے صفحے یا FBS پرسنل ایریا کے فنانشل سیکشن پر جائیں اور وڈرا تک رسائی حاصل کریں۔ آپ کمائی ہوئی رقم اسی ادائیگی کے نظام کے ذریعہ حاصل کرسکتے ہیں جو آپ نے ڈپازٹ کرنے کے لئے استعمال کیا تھا۔ اگر آپ نے مختلف طریقوں کے ذریعہ اکاؤنٹ کو مالی اعانت فراہم کی ہے تو، جمع شدہ رقوم کے حساب سے تناسب میں اسی طریقوں کے ذریعہ اپنا منافع واپس لیں۔

  • ٹریڈنگ کیسے شروع کی جائے؟

    اگر آپ +18 سے زائد کی عمر رکھتے ہیں، تو آپ FBS میں شامل ہوسکتے ہیں اور اپنے FX سفر کا آغاز کر سکتے ہیں۔ ٹریڈںگ کرنے کے لئے، آپ کو ایک بروکریج اکاؤنٹ اور مالیاتی منڈیوں میں اثاثوں کے برتاؤ کے بارے میں مناسب علم کی ضرورت ہے۔ ہمارے مفت تعلیمی مواد اور ایک FBS اکاؤنٹ بنانے کے ساتھ بنیادی باتوں کا مطالعہ بھی شروع کریں۔ آپ ڈیمو اکاؤنٹ کے ذریعہ ورچوئل پیسہ سے اس پورے ماحول کی جانچ پڑتال بھی کرسکتے ہیں۔ ایک بار جب آپ تیار ہوجائیں تو، حقیقی مارکیٹ میں داخل ہوں اور کامیابی کے لئے ٹریڈںگ یعنی تجارت شروع کریں۔

  • لیول اپ بونس کو کیسے فعال کیا جائے؟

    اپنے FBS پرسنل ایریا کے ویب یا موبائل ورژن میں لیول اپ بونس اکاؤنٹ کھولیں اور اپنے اکاؤنٹ میں 140$ تک مفت حاصل کریں۔

ڈپوزٹ کریں اپنے لوکل طریقوں سے۔

اپنے کھیل میں سر فہرست رہیں۔

ڈیٹا جمع کرنے کا نوٹس

ایف بی ایس اس ویب سائٹ کو چلانے کے لئے آپ کا ریکارڈ ترتیب دیتا ہے۔ "قبول" کا بٹن دبانے سے آپ ہماری پرائویسی پالیسی پر اتفاق کرتے ہیں۔

دوبارہ کال کریں

ایک مینجر جلد ہی آپکو کال کرے گا

نمبر تبدیل کریں

آپ کی درخواست موصول ہو گئ ہے

ایک مینجر جلد ہی آپکو کال کرے گا

اس فون نمبر کیلئے اگلی کال بیک کی درخواست
۔ میں دستیاب ہوگی

اگر آپ کو کوئی فوری مسئلہ درپیش ہے تو براہ کرم ہم سے رابطہ کریں
لائیو چیٹ کے ذریعے

اندروانی مسئلہ ،تھوڑی دیر بعد کوشش کریں

اپنا وقت ضائع نہ کریں – اس بات پر نظر رکھیں کہ NFP امریکی ڈالر اور منافع کو کس طرح متاثر کرسکتا ہے!

ابتدائی فوریکس گائیڈ بک

فاریکس پر نئے آنے والوں کیلئے یہ کتاب ٹریڈنگ کی دنیا کے بارے میں رہنمائی کرتی ہے۔

ابتدائی فوریکس گائیڈ بک

ٹریڈنگ شروع کرنے کے لئے سب سے اہم چیزیں
اپنا ای میل لکھیں اور ہم آپ کو مفت ابتدائی فوریکس گائیڈ بک بھیجیں گے

شکریہ آپکا ای میل موصول ہو چکا ہے

ہم نے آپ کے ای میل پر ایک خصوصی لنک ای میل کیا ہے۔
لنک پر کلک کریں اور اپنی فوریکس گائیڈ بک وصول کریں۔

آپ اپنے براؤزر کے پرانا ورژن کا استعمال کر رہے ہیں.

اپ ڈیٹ کریں اور محفوظ، مزید آرام دہ، پرسکون اور پیداواری ٹریڈنگ کے تجربے کے لئے ایک کوشش کریں.

Safari Chrome Firefox Opera